عراقی گرین زون میں انتخابی نتائج کے خلاف دھرنا جاری

عراقی انتخابات کے نتائج کے خلاف شروع ہونے والے مظاہرے ، گرین زون میں داخلی دروازوں کے سامنے کھلے دھرنے میں تبدیل ہو گئے ۔ مظاہرین نے گرین زون کے دروازوں پر کئی دھرنے کے خیمے لگائے اور اس بات پر زور دیا کہ ان کا دھرنا تب تک جاری رہے گا جب تک کہ ہائی کمیشن ووٹ کی گنتی کے عمل کے دوران ہونے والی "سنگین خلاف ورزیوں کو درست نہیں کرتا” ۔

بدھ کی شام ، آزاد ہائی الیکشن کمیشن کے سربراہ جج جلیل عدنان نے کہا کہ کمیشن انتخابی نتائج پر اعتراض کرنے والوں کی جانب سے پیش کی گئی اپیلوں پر قانون کے مطابق غور کرے گا اور کونسل منسلک شواہد پر غور کرے گی ۔ اگر اپیلیں درست ثابت ہوتی ہیں تو متنازعہ پولنگ اسٹیشنوں پر دوباہ پولنگ کرائیں گے ۔

کمیشن نے پرائیویٹ اور پبلک ووٹنگ میں ووٹرز کے فنگر پرنٹس کے ملاپ کے عمل کو ختم کرنے کا اعلان کیا اور الیکشن قانون کے آرٹیکل (39) پانچویں سی میں مقرر قانونی مدت سے کم میں اور خلاف ورزی کرنے والوں سے قانونی طریقہ کار کے مطابق مجاز عدالتوں سے نمٹا جائے گا ۔

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles