سوڈان میں فوجی بغاوت کی کوشش ناکام، باغی افسران گرفتار

سوڈانی وزیر اطلاعات حمزہ بلول نے کہا کہ بغاوت کی ناکام کوشش ، حکومت پلٹنے کی کوشش کر رہی ہے ۔

بالول نے ایک پریس کانفرنس کے دوران مزید کہا ہے کہ ہم نے افسران کی ناکام بغاوت کی کوشش پر قابو پا لیا ہے ۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہم سوڈانی عوام کو یقین دلاتے ہیں کہ حالات مکمل کنٹرول میں ہیں کیونکہ بغاوت کی کوشش کے لیڈر ، فوجی اور عام شہری ، دونوں کو گرفتار کر لیا ہے جو اس وقت زیر تفتیش ہیں ۔

انہوں نے نشاندہی کی کہ سکیورٹی حکام بغاوت میں شریک سابق حکومت کی باقیات کا تعاقب جاری رکھے ہوئے ہیں ۔

میڈیا کے مطابق سیاسی و حکومتی بحران کے شکار سوڈان میں فوج کے 20 اعلیٰ افسران نے آرمڈ کور کا کنٹرول حاصل کرلیا اور حکومت کا تختہ الٹنے کی کوشش کی تاہم سرکاری ٹیلی وژن اور ریڈیو پر قبضے کے لیے جانے والے افسران کو ناکامی کا سامنا کرنا پڑا ۔

واضح رہے کہ مسلسل 30 برس تک سوڈان پر حکمرانی کرنے والے عمر البشیر کی 2019 میں معزولی اور گرفتاری کے بعد سے تاحال مستحکم سیاسی حکومت قائم نہیں ہوسکی ہے اور اس وقت عبداللہ حمدوک اشتراک اقتدار کے معاہدے کے تحت نگراں وزیر اعظم ہیں ۔

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles