جلبوع جیل سے فرار 6 قیدیوں میں سے آخری دو بھی گرفتار ہو گئے

اسرائیلی قابض افواج نے 6 فرار فلسطینی قیدیوں میں سے آخری 2 فلسطینی قیدیوں کو بھی گرفتار کیا جو جلبوع جیل سے فرار ہوئے تھے ۔ باقی 4 کو پہلے گرفتار کیا جا چکا ہے ۔

قابض فوج نے ایہم کممجی اور مناضل انفعیات کی گرفتاری کا اعلان کیا جو جلبوع جیل سے اپنی آزادی نکالنے میں کامیاب ہوئے ۔

قابض میڈیا نے رپورٹ کیا کہ کممجی اور انفعیات کو مشرقی جنین میں اسرائیلی فوج کی سیکیورٹی آپریشن کے نتیجے میں گرفتار کیا گیا ۔

اطلاعات کے مطابق قابض فوج نے جینین میں ایک گھر کو گھیرے میں لے لیا اور مطالبہ کیا کہ اس میں موجود تمام افراد عمارت سے نکل جائیں اور مسلح جھڑپیں شروع ہونے سے پہلے ہتھیار ڈال دیں جس کے نتیجے میں دونوں قیدیوں کو گرفتار کر لیا گیا ۔

قابض میڈیا نے اطلاع دی کہ قابض فوج نے دونوں قیدیوں کے دو معاونین کو بھی گرفتار کیا اور یہ کہ اس آپریشن کے نتیجے میں قابض افواج میں کوئی چوٹ نہیں آئی جبکہ اس پر مقامی باشندوں نے حملہ کیا ۔

گذشتہ ہفتے اسرائیلی حکام نے 6 میں سے 4 قیدیوں کو گرفتار کیا جو کہ بھاری قلعہ بند جلبوع جیل سے کھودی گئی سرنگ کے ذریعے فرار ہوئے تھے ۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ اس ماہ کی 6 تاریخ کو جلبوع جیل میں چھ قیدی جو سب شمالی مغربی کنارے کے جنین گورنریٹ سے تعلق رکھتے ہیں ، اپنے سیل کے اندر سے کھودی گئی سرنگ کے ذریعے جیل سے فرار ہونے میں کامیاب ہوگئے تھے ۔

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles