یمنی عدلیہ کا 9 مجرموں کے خلاف سزائے موت پر عملدرآمد

یمنی عدلیہ نے سپریم پولیٹیکل کونسل کے سابق سربراہ شہید صالح علی الصمد اور اس کے ساتھیوں کے قتل میں ملوث سعودی اتحاد سے وابستہ نو مجرموں کو سزائے موت سنائی ۔

اس فیصلے کو دارالحکومت صنعاء کے جنوب میں واقع سبسین اسکوائر میں سخت سیکورٹی اور فوجی تعیناتی کے درمیان نافذ کیا گیا ۔ اس موقع پر ہزاروں یمنی شہری بھی موجود تھے ۔

سزائے موت کا فیصلہ سپریم کورٹ کی منظوری اور سپریم پولیٹیکل کونسل کے صدر مہدی المشاط کی منظوری کے بعد جاری کیا گیا ۔

یاد رہے صمد کو 2018 میں جنوبی یمن کے شہر حدیدہ میں تین سعودی فضائی حملوں کے ذریعے شہید کیا گیا ۔

سزائے موت پانے والے مجرموں میں علی علی ابراہیم الکوزی ، عبدالمالک احمد محمد حامد ، محمد خالد علی ہیگ ، محمد ابراہیم علی الکوزی ، محمد یحییٰ محمد نوح ، ابراہیم محمد عبداللہ اکیل ، محمد محمد المشخری ، عبدالعزیز علی محمد العسود اور معاذ عبدالرحمن عبداللہ عباس شامل ہیں ۔

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles