دو سال بعد حرمین شریفین میں باقاعدہ نماز جماعت کا آغاز

آج ہزاروں نمازیوں نے مکہ مکرمہ کی مسجد الحرام اور مدینہ منورہ میں مسجد نبوی میں فجر کی نماز ادا کی ۔ دو سال میں پہلی بار سماجی علیحدگی کے اصولوں پر عمل بند کر کے باقاعدہ نماز جماعت قائم کی گئی ۔

اس سے قبل صدرات عامہ برائے امور حرمین شریفین کی ہدایت پر دونوں مقدس مساجد کو مکمل طور پر نمازیوں کے لیے کھولے جانے کے بعد حرم شریف میں سماجی فاصلے کی ہدایات کے لیے جگہ جگہ لگائے گئے بورڈ اور اسٹیکرز ہٹا دیے گئے ۔ سماجی فاصلے کے یہ اسٹیکرز ایک ایسے وقت میں ہٹائے گئے ہیں جب حرمین الشریفین کو مکمل طورپر نمازیوں کے لیے کھولنے اور ایس اوپیز میں نرمی کا فیصلہ کیا گیا ۔ تاہم کارکنوں ، زائرین اور نمازیوں کے لئے ماسک پہننا اور مکمل ویکسین لگوانا ضروری ہے ۔

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles