پاکستان میں ہماری ملاقاتیں اچھی رہیں ، ایرانی پارلیمانی وفد کے سربراہ

ایرانی اور پاکستانی پارلیمانی فرینڈشپ گروپ کے سربراہ احمد امیر آبادی فرحانی نے کہا ہے کہ ہم پاکستان کے ساتھ مشترکہ ثقافتی ، رسم و رواج اور روایات کے ذریعے مربوط ہیں ۔ ہماری اسلام آباد میں پارلیمانی اور حکومتی شخصیات سے ملاقاتیں اچھی رہیں ۔

اپنے پاکستان کے دورہ کے موقع پر یونیوز ایجنسی کو خصوصی بیان میں فرحانی نے کہا کہ خطے میں صہیونی وجود کی موجودگی کے خلاف اسلامی ممالک خاص طور پر ایران اور پاکستان کے مابین فکری تعاون کی ضرورت ہے ۔

فرحانی نے مزید کہا کہ پاکستانی قیادت نے ہمیں ان ملاقاتوں کے دوران یقین دلایا کہ صہیونی دشمن خطے کے مسلمانوں مین تفرقہ ڈالنے کے لئے فرقہ واریت کو ہوا دیتا ہے جس کے لیے انتہائی احتیاط کی ضرورت ہے ۔

انہوں نے وضاحت کی کہ فلسطین کے مسئلے پر پاکستانی قیادت کا مؤقف ایک بہترین پوزیشن ہے کیونکہ وہ صہیونیوں کے ساتھ امن معاہدے کرنے والے بعض عرب ممالک کے موقف کی حمایت نہیں کرتے ۔ انہوں نے ہمیں یقین دلایا کہ انہوں نے صہیونی قبضہ کی قانونی حیثیت کو کبھی تسلیم نہیں کیا ۔

انہوں نے مزید کہا کہ بہت سے علاقائی مسائل میں بھی دونوں ممالک میں ہم آہنگی ہے ۔ اس بات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہ تہران اور اسلام آباد کے درمیان دیگر کراسنگ سمیت اقتصادی مسائل کی ایک پریزنٹیشن ہوئی ۔ انہوں نے دونوں ممالک کے درمیان اقتصادی سرمایہ کاری کے لیے سرحدی بازار کھولنے کے منصوبوں کا انکشاف کیا ۔ اس کے علاوہ پاکستان میں ایرانی گیس برآمد کرنے کے لیے گیس پائپ لائن کی فائل پر تبادلہ خیال کی گئی ۔ پاکستانی وزراء ، رہنماؤں اور پارلیمانی شخصیات نے ان منصوبوں کا خیرمقدم کیا ۔ مشترکہ سرحدوں سے متعلق کچھ فائلوں کی پر ایرانی اور پاکستانی پارلیمانوں نے فالو اپ پر اتفاق کیا ۔

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles