مغربی کنارے میں جھڑپیں اور گرفتاریاں ، ناصرہ میں قیدیوں کی حمایت میں مظاہرہ

فلسطینی علاقوں میں اسرائیلی قابض افواج کے درمیان ایک سے زائد مقامات پر تصادم ہوئے ۔ فلسطینی ذرائع نے اطلاع دی ہے کہ مجاہدین نے آزاد ہونے والے قیدیوں کی تلاش کی کوشش کے دوران جنین میں الجلمہ چوکی اور یابد قصبے کے گرد قابض فوج پر فائرنگ کی ۔

جہاد اسلامی کے عسکری ونگ القدس بریگیڈ نے اعلان کیا کہ جنین میں ہمارے ایک گروپ نے اسرائیلی قابض فوجیوں کے ایک اجتماع کے بعد الجلمہ چوکی کی طرف فائرنگ کی ۔

گذشتہ شام نابلس کے جنوب میں حوارہ فوجی چوکی پر قبضے کے ساتھ جھڑپوں کے دوران ربڑ کی گولیوں سے آٹھ شہری اور 15 گیس کی گھٹن سے زخمی ہوئے ۔

نابلس میں ریڈ کریسنٹ ایمرجنسی اینڈ ایمبولینس سینٹر کے ڈائریکٹر احمد جبریل نے بتایا کہ ایمبولینس کے عملے نے ہاورہ چوکی پر قابض فورسز کے ساتھ تصادم کے دوران 8 زخمیوں کو ربڑ گولیوں سے اور آنسو گیس سے دم گھٹنے کے 15 زخمیوں سے نمٹا ۔ مقبوضہ بیت المقدس کے شمال میں قلندیا چوکی پر بھی جھڑپیں ہوئیں جس میں درجنوں شہری زخمی بھی ہوئے ۔

خلیل کے شمال میں العروب مہاجر کیمپ میں قبضے کے ساتھ تصادم کے دوران 4 نوجوانوں کو گرفتار کیا گیا ۔ فلسطینی ذرائع نے بتایا کہ کیمپ کے داخلی راستے پر جھڑپوں کے بعد العروب کیمپ میں درجنوں شہریوں کا دم گھٹ گیا ۔ اس دوران قابض فوجیوں نے شہریوں اور ان کے گھروں پر زندہ اور ربڑ کی گولیاں اور صوتی اور گیس بم فائر کیے ۔ محاذ آرائی کے دوران قابض فورسز نے سليم مازن جوابرہ (19 سال) ، كامل ابراهيم أبو هشهش (17 سال) ، محمد احمد ابو طماعہ (19 سال) اور اسلام بنات (18 سال) کو بھی گرفتار کیا ۔

گذشتہ شام اسرائیلی قابض فوج نے بیت المقدس سے ایک نوجوان کو گرفتار کیا ۔ مقامی ذرائع نے اطلاع دی کہ قابض فوج نے نوجوان الشبلی (26 سال) کو بیت المقدس میں اس کے گھر پر چھاپہ مارنے کے بعد گرفتار کیا گیا ۔ مقبوضہ بیت المقدس کے مشرق میں واقع الاسویہ اور ال تر کے محلوں میں بھی جھڑپیں ہوئیں اور قابض افواج نے شہریوں پر ربڑ اور سپنج کی گولیاں چلائیں اور آنسو گیس کے بم پھینکے ۔

1948 میں مقبوضہ علاقوں میں فلسطینیوں نے اسرائیلی قبضے کی جیلوں میں قیدیوں کے ساتھ تعاون اور حمایت کا موقف ترتیب دیا ۔ احتجاج کے دوران ، ناصرہ اور قریبی عرب قصبوں کے شرکاء نے فلسطین کے جھنڈے اٹھائے اور قیدیوں کی آزادی کے نعرے لگائے اور انہوں نے جیلوں میں قیدیوں کی جدوجہد کی حمایت میں نعرے بلند کیے ۔

مظاہرین نے 1948 میں وسطی مقبوضہ فلسطین کی وادی آرا اسٹریٹ پر قیدیوں سے اظہار یکجہتی کے لیے احتجاجی مظاہرے کے دوران ٹائر نذر آتش کیے ۔

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles