پاکستان میں سمارٹ لاک ڈاون سمیت متعدد پابندیاں پھر سے نافذ

پاکستانی حکومت نے کچھ شہروں میں کورونا مخالف پابندیاں دوبارہ نافذ کر دی ہیں جن میں انفیکشن میں اضافہ دیکھا جا رہا ہے کیونکہ ملک وبا کی چوتھی لہر میں داخل ہو گیا ہے ۔

حکومت پاکستان نے کویڈ-19 سے متاثرہ علاقوں میں اسمارٹ لاک ڈاون لگا کر دارالحکومت اسلام آباد سمیت 24 شہروں کے درمیان آمد و رفت پر پابندی لگا دی ہے ۔ نئی پابندیوں کے علاوہ سبھی تعلیمی ادارے آج سے ایک ہفتہ مزید بند رہیں گے ۔

یہ قابل ذکر ہے کہ حکومت نے وبا کے آغاز سے ہی مکمل بندش کی پالیسی کو مسترد کر دیا اور سمارٹ لاک ڈاون کی پالیسی اپنائی جو کہ کورونا وائرس کی پہلی تین لہروں کے دوران کامیاب رہی ۔ اب اسے چوتھی لہر میں بھی اختیار کیا گیا ہے ۔

حکام نے شہریوں سے مطالبہ کیا کہ وہ جلد از جلد ویکسینیشن کے لیے اندراج کریں تاکہ انہیں تغیر پذیر ڈیلٹا وائرس سے محفوظ رکھا جا سکے ۔

پاکستان میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران کورونا وائرس کے 3،480 نئے کیس اور 82 اموات ریکارڈ کی گئیں ۔

پاکستانی نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کی جانب سے جاری بیان کے مطابق ، گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک میں کورونا کی تشخیص کے لیے 63181 ٹیسٹ کیے گئے جن میں سے 3480 افراد میں کورونا وائرس کی تصدیق ہوئی ۔ گزشتہ روز اس وبا نے مزید 82 افراد کی زندگیوں کو نگل لیا۔ جب کہ مثبت کیسز کی شرح5.50 فیصد ریکارڈ ہوئی ہے ۔ اس کے علاوہ 5373 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے ۔

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles