آتش فشاں ، لا پالما ائیرپورٹ دوبارہ بند

ہسپانوی جزیرے لا پالما کا ہوائی اڈہ آج صبح کمبری ویجا آتش فشاں سے لاوا کے اخراج کی وجہ سے دوبارہ بند کر دیا گیا جو کہ ڈھائی ہفتوں سے جاری ہے جیسا کہ ہسپانوی ایئر پورٹس مینجمنٹ کمپنی نے اعلان کیا ہے ۔

ایئرپورٹ کے ترجمان نے کہا ہے کہ ہوائی اڈہ اس وقت کام نہیں کررہا ہے کیونکہ رن وے پر جمع ہونے والی راکھ کی وجہ سے پروازوں کی آمد و رفت ممکن نہیں ہے ۔

ایئر پورٹ انتظامیہ کے مطابق آتش فشاں کے پھٹنے کے بعد یہ دوسری بندش ہے تاہم انہوں نے امید ظاہر کی کہ یہ شاید زیادہ دیر تک نہیں چلے گی ۔

بدھ کی شام تک ، ایئر لائن پنٹر نے خبردار کیا تھا کہ وہ پروازیں منسوخ کردے گی ۔

کمپنی نے بدھ کی شام ایک ٹویٹ میں کہا کہ 7 اکتوبر سے لاس پاماس کے ساتھ ہماری تمام پروازیں منسوخ کردی جائیں گی ۔ یہ معطلی اس وقت تک جاری رہے گی جب تک حالات بہتر نہیں ہوتے اور ہم دوبارہ بحفاظت پرواز کر سکتے ہیں ۔ پھر کینری فلائی نے بھی اس کی پیروی کی اور ٹویٹر پر یہ بھی اشارہ کیا کہ وہ جزیرے پر آنے اور جانے والی تمام پروازیں عارضی طور پر معطل کر رہی ہے ۔

جزیرے والی ایئر لائنز ، جو کہ 25 ستمبر کو بگڑتی ہوئی حفاظتی صورت حال کی وجہ سے معطل تھیں ، ان کو 25 ستمبر کو ہی کچھ ہی دیر بعد دوبارہ شروع کر دیا گیا ۔

آتش فشاں کا پھٹنا 19 ستمبر کو شروع ہوا ۔ جس میں کوئی ہلاکت یا زخمی نہیں ہوئے ۔ لاوے کے بہنے کی وجہ سے چھ ہزار سے زائد افراد کا انخلاء کرنا پڑا کیونکہ اس چھوٹے سے جزیرے کو شدید مالی نقصان پہنچا ہے جو تقریبا 85 ہزار افراد پر مشتمل ہے ۔

آتش فشاں انسٹی ٹیوٹ آف کینری کے فراہم کردہ تازہ ترین اعدادوشمار کے مطابق ایک ہزار سے زائد عمارتیں لاوا سے تباہ ہوئیں ۔ لاوہ جزیرے کے 422 ہیکٹر رقبے پر محیط ہے اور سمندر تک بھی پہنچ چکا ہے ۔

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles