روسی دفاع : 17 یوکرائنی فوجی تنصیبات کی تباہی، بشمول کمانڈ اور کمیونیکیشن سائٹس اور گولہ بارود کے ڈپو بھی شامل

روسی وزارت دفاع کے ترجمان ایگور کوناشینکوف نے تصدیق کی کہ روسی جنگجوؤں نے پیر کو دن کے وقت یوکرین میں 17 فوجی اہداف پر بمباری کی۔
ترجمان نے کہا، "روسی مسلح افواج نے یوکرین کے فوجی ڈھانچے پر بمباری جاری رکھی۔ دن کے وقت، روسی فضائیہ کے آپریشنل ٹیکٹیکل ایوی ایشن نے یوکرین کی 17 فوجی تنصیبات پر حملے شروع کیے،” ترجمان نے کہا۔
ترجمان نے کہا کہ "اہداف میں دو کمانڈ اینڈ کمیونیکیشن سینٹرز، دو گولہ بارود کے ڈپو اور ایک ایندھن ڈپو کے علاوہ 11 گڑھ اور یوکرائنی فورسز کے حراستی علاقے شامل ہیں۔”


انہوں نے مزید کہا کہ "روسی فضائی دفاعی نظام نے دو ڈرونز کو سیویروڈونٹسک گاؤں کے قریب فضا میں مار گرایا۔”
یوکرین کی سرزمین پر روسی فوجی آپریشن 24 فروری سے جاری ہے۔
روس کے صدر ولادیمیر پوتن نے زور دے کر کہا کہ "روس یوکرائنی سرزمین پر قبضہ کرنے کا ارادہ نہیں رکھتا ہے” اور وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ "روس کا مقصد ان لوگوں کی حفاظت کرنا ہے جو آٹھ سالوں سے کیف حکومت کے ظلم و ستم اور نسل کشی کا شکار ہیں۔”

مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
مواضيع ذات صلة
Related articles